سپین میں 2 ہزار سال پرانا مدفون شہر دریافت

0
16

سپین میں 2 ہزار سال پرانا مدفون شہر دریافت۔ محققین نے دریافت کو غیرمعمولی قرار دیدیا۔

ہسپانوی شہر زراگوزا میں ماہرین آثار قدیمہ نے 2 ہزار سال پرانا مدفون رومن شہر دریافت کرلیا۔  میڈیا رپورٹس کے مطابق محققین کا خیال ہے کہ یہ شہر رومی سلطنت کا حصہ تھا اور ایک فوجی کیمپ کے طور پر استعمال ہوتا تھا۔

محققین کے مطابق یہ شہر اس جزیرہ نما علاقے کا حصہ تھا ،جوآج سپین اور پرتگال پر مشتمل ہے، شہر کا نام فی الحال نامعلوم ہے۔ اس شہر کو زراگوزا یونیورسٹی کے محققین نے دریافت کیا ہے، اس میں ایک بہت بڑے پلازے کے کھنڈرات ملے ہیں، جہاں کئی ستون اور کمرے تھے۔

ماہرین کے مطابق یہ کمرے تجارت کا سامان ذخیرہ کرنے کے لیے استعمال ہوتے تھے۔تحقیق کی قیادت کرنے والے شریک ڈائریکٹرز میں سے ایک بورجا ڈیاز کاکہنا ہے کہ اس شہر کی دریافت نا صرف اس کے طول و عرض اور تعمیراتی پیچیدگی کی وجہ سے غیرمعمولی اہمیت کی حامل ہے، بلکہ یہ جزیرہ نما آئبیرین کے اندرونی علاقے میں اب تک دریافت کیا جانیوالا قدیم ترین شہر ہے۔

ان کے بقول یہ دریافت ہسپانیہ میں رومن آرکیٹیکچرل ماڈلز کے پھیلاؤ کے ابتدائی مرحلے کے بارے میں ماہرین آثار قدیمہ کی معلومات کو یکسر تبدیل کرنے میں معاون ثابت ہوگی۔یہاں سے کچھ نوادرات بھی ملے ہیں، جن میں پتھر اور دھاتوں پر لکھی تحریریں، مٹی کے برتن اور دیگر اشیا شامل ہیں۔محققین کا کہنا ہے کہ ممکنہ طور پر سربین جنگوں کے دوران یہ شہر برباد ہوا، یہ جنگیں 80 اور 72 قبل مسیح کے درمیان لڑی گئی تھیں۔

Leave a reply