بانی پاکستان تحریک انصاف عمران خان کی اہلیہ بشریٰ بی بی کی بنی گالہ منتقلی کیخلاف درخواست

0
33

(پاکستان ٹوڈے) اسلام آباد ہائی کورٹ نے بانی پاکستان تحریک انصاف عمران خان کی اہلیہ بشریٰ بی بی کی بنی گالہ منتقلی کیخلاف درخواست پر اسلام آباد انتظامیہ کے سینئر افسر کو بنی گالہ کے دورے کا حکم دے دیا۔
اسلام آباد ہائی کورٹ میں بشری بی بی کی بنی گالہ سے اڈیالہ جیل منتقلی کی درخواست پر سماعت جسٹس میاں گل حسن اورنگزیب نے کی ،

عدالت نے سٹیٹ کونسل سے استفسار کیا کہ یہ گھر کس کی ملکیت ہے ؟ کیا مالک مکان کی مرضی سے یہ ہوا ہے ؟ جسٹس میاں گل حسن اورنگزیب نے استفسار کیا کہ جب کسی کے گھر کو آپ سب جیل قرار دیتے ہیں تو کیا مالک سے اجازت لیتے ہیں ؟
کیا اس کیس میں گھر کے مالک سے آپ نے اجازت لی ؟ جس پر سٹیٹ کونسل کے وکیل نے جواب دیا کہ بشری بی بی کیونکہ سابق فرسٹ لیڈی ہیں اس لیے ان کی سکیورٹی کے لئے بنی گالہ منتقلی ہوئی ہے

عدالت نے اسلام آبادانتظامیہ کے سینئر افسر کوسب جیل بنی گالہ کے دورہ کا حکم دیا اور 31 جنوری سے لیکر اب تک بشری بی بی سے کتنی ملاقاتیں ہوئیں، اس پرجیل سپریٹنڈنٹ کو رپورٹ جمع کرنے کی ہدایت کی۔
عدالت نے حکم دیا کہ بشریٰ بی بی اور بانی پی ٹی آئی کی ملاقات کی درخواست پر سپریٹنڈنٹ جیل آرڈر پاس کرے، سپریٹنڈنٹ جیل آرڈر کی رپورٹ اسلام آباد ہائیکورٹ کے رجسٹرار کے پاس جمع کرائیں۔بعدازاں عدالت نے کیس کی سماعت ملتوی کردی۔

یاد رہے کہ 22 فروری کو اسلام آباد ہائی کورٹ میں توشہ خانہ کیس میں سزا یافتہ سابق وزیر اعظم و بانی چیئرمین تحریک انصاف عمران خان کی اہلیہ بشریٰ بی بی کی بنی گالا سب جیل سے اڈیالہ جیل منتقلی کی درخواست پر اڈیالہ جیل انتظامیہ نے سابق خاتون اول کو جیل منتقل کرنے سے انکار کردیا تھا۔

Leave a reply