سائنسدانوں نے مریخ پر پراسرار گڑھا دریافت کر لیا

0
12

 انہیں کوئی اندازہ نہیں کہ اس کے اندر کیا ہو سکتا ہے۔ سائنسدانوں کا خیال ہے کہ مستقبل میں مریخ پر پہنچنے والے انسان ریڈی ایشن سے بچنے کے لیے اس گڑھے کے اندر پناہ لے سکیں گے۔

اگر مریخ زمین یا چاند کی طرح ہوا تو اس کا امکان ہے کہ اس گڑھے کی سطح کے نیچے لاوے کی خشک سرنگیں ہوں گی جو انسانوں کی پناہ گاہ ثابت ہو سکتی ہیں۔

یہ گڑھا مریخ کے Arsia Mons نامی خطے میں موجود ہے جس کے نیچے ایک خوابیدہ آتش فشاں چھپا ہوا ہے۔ مریخ میں ایسے متعدد ماحولیاتی خطرات موجود ہیں جو انسانی جان کے لیے خطرناک ثابت ہو سکتے ہیں۔ مریخ کی لاوا سرنگیں اب بھی ایک اسرار ہیں اور سائنسدانوں کے خیال میں وہاں ایسی سرنگیں بہت زیادہ ہیں۔

بھی امکان ہے کہ یہ کوئی سرنگ نہیں بلکہ ایک گڑھا ہی ہو۔سائنسدانوں کے خیال میں یہ گڑھا 178 میٹر گہرا ہوسکتا ہے۔مستقبل میں روبوٹیک مشنز کے ذریعے اس گڑھے کی کھوج کی جائے گی اور وہاں چھپے رازوں کو جاننے کی کوشش کی جائے گی۔

Leave a reply