کان کی صفائی کیلئے کن چیزوں کا استعمال خطرناک ہے؟

0
32

پاکستان ٹوڈے تفصیلات کے مطابق کان ہمارے جسم کے اہم ترین اعضاء میں سے ایک ہیں جن کی حفاظت کرنا بہت ضروری ہے جب ہم اپنے کان صحیح طریقے سے صاف نہیں کرتے تو اس سے غیر ضروری تکلیف کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

دنیا بھر میں ہر سال 3 مارچ کو ’ورلڈ ہیرنگ ڈے‘ منایا جاتا ہے، اس دن کے منانے کا مقصد بہرے پن اور قوت سماعت سے محرومی کے بارے میں آگاہی پیدا کرنا ہے۔

کان کی میل سے بچنے کے لئے ان کی صفائی انتہائی ضروری ہے، بہت سے لوگ اپنے میل بھرے کانوں کو صاف کرنے کے لئے کاٹن بڈز پر انحصار کرتے ہیں لیکن ہم میں سے بہت سے لوگ ایسے بھی ہونگے جو صفائی ہی نہیں کرتے۔

کچھ لوگ کانوں میں کاٹن کی سلائی، پین، پینسل کی نوک یا کاغذ کی بتی بنا کر اس کی مدد سے میل نکالنے کی کوشش کرتے ہیں۔

ہم کانوں کے میل سے نجات حاصل کرنے کے لیے جو طریقے اپناتے ہیں اس سے سماعت کو نقصان پہنچتا ہے اور رفتہ رفتہ سماعت ختم ہوتی جاتی ہے۔

اگر آپ کے کانوں میں میل جم جاتا ہے تو اس کو صاف کرنے کے لئے کن طریقوں کا استعمال کرنا چاہیے؟

ایئر بڈز کے استعمال سے گریز کریں
کبھی کبھار ایسا ہوتا ہے کہ ہمارے کانوں کا ویکس خود بخود باہر آ جاتا ہے۔ ایئر بڈز (کاٹن بڈز) یا کسی دوسری بیرونی چیز کے ذریعے کانوں کی صفائی نہیں کرنی چاہیے۔

کانوں کے پردہ نہایت نازک ہوتا ہے اور کان کی نالی میں اگر کوئی چیز گھسائی جائے تو اس سے کان کو نقصان پہنچ سکتا ہے۔

نہاتے وقت دھیان رکھیں
نہاتے وقت اپنے کانوں میں پانی نہ جانے دیں۔ کانوں میں پانی جانے کے باعث بیکٹریا اور پھپھوندی پیدا ہو سکتی ہے۔ نہانے کے دوران کانوں پر رکاوٹ ڈالیں یا سر کو ایسے زاویے پر رکھیں جس سے پانی کانوں سے تیزی سے نکل جائے۔

کانوں کو خود صاف کرنے سے اجتناب کریں
اگر آپ اپنے کانوں میں کسی بھی قسم کی تکلیف جیسے کے سننے کے مسائل، درد اور بھاری پن محسوس کریں تو فوری طور ای این ٹی ڈاکٹر سے مدد حاصل کریں۔ یہ علامات رگوں کی کمزوری یا انفیکشن کا نتیجہ ہو سکتی ہیں۔

اگر آپ کے کانوں میں زیادہ میل یعنی ویکس ہے تو خود سے صفائی کرنے کے بجائے ای این ٹی اسپیشلسٹ سے محفوظ اور مؤثر صفائی کے طریقے کار اپنائیں

کانوں کو صاف کرنے کے مؤثر طریقےجب کان میں میل بھر جاتا ہے تو وہ شخص آسانی سے محسوس کر سکتا ہے۔ اس لئے کان کا میل کو صاف کرنے کے لئے ہلکے گیلے کپڑے کا استعمال کریں، روئی کا استعمال نہ کریں کیونکہ اس کی وجہ سے کان کا میل نالیوں کے اندر تک چلا جاتا ہے۔

آہستہ آہستہ کپڑے کی مدد سے کان کو صاف کرنے کی کوشش کریں۔ آپ کان کے بیرونی حصے پر روئی کا استعمال کرسکتے ہیں

Leave a reply